Thursday, 10 October 2013

پروردگار کی محبت

ایک عورت حضرت جنید بغدادی رحمته الله علیه کی خدمت میں حاضر هوئی اور عرض کیا که میرا شوهر دوسرا نکاح کرنا چاهتا هے . آپ رحمته الله علیه نے فرمایا اگر اس کے نکاح میں پہلے سے چار عورتیں نہیں هیں تو اس کے لئے یه نکاح جائز هے .
عورت بولی ،
" اے جنید ! اگر غیر مرد کو چہرا دکھانا جائز هوتا تو میں نقاب اٹھا کر آپکو اپنا چہرا دکھاتی اور پوچھتی که جس مرد کی مجھ جیسی حسین بیوی هو کیا اس کیلئے بھی دوسری شادی جائز هے ؟
یه سن کر حضرت جنید بغدادی بے هوش هو گئے .
جب هوش میں آئے اور لوگوں نے بے هوشی کی وجه پوچھی تو فرمایا :
ابھی میرے دل میں خیال آیا که الله تعالی فرماتا هے که اگر میرا بنده میرا دیدار کر سکتا تو میں بندے سے پوچھتا که جس کا مجھ جیسا پروردگار هو اس کے دل میں کسی اور کی محبت هونی چاهیۓ یا نہیں ...
( نزهۃ المجالس )

0 comments:

اگر ممکن ہے تو اپنا تبصرہ تحریر کریں

اہم اطلاع :- غیر متعلق,غیر اخلاقی اور ذاتیات پر مبنی تبصرہ سے پرہیز کیجئے, مصنف ایسا تبصرہ حذف کرنے کا حق رکھتا ہے نیز مصنف کا مبصر کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں۔

Archive

About

subtainhdr

Google+ Badge

PAKISTAN TIME

Blog Archive